1. دار الافتاء الاخلاص کراچی
  2. اذکار ودعائیں

صبح و شام کی نعمتوں کا شکر بجا لانے کی دعا

سوال

مفتی صاحب! صبح و شام کی دعاؤں میں سے کوئی ایسی دعا بتادیں، جس کے پڑھنے سے اس دن اور رات کی نعمتوں کا شکر ادا ہو جائے۔

جواب

صبح کی نعمتوں کا شکر بجا لانے کے لیے یہ دعا پڑھیں:

اللَّهُمَّ مَا أَصْبَحَ بِي مِنْ نِعْمَةٍ فَمِنْكَ وَحْدَكَ لَا شَرِيكَ لَكَ فَلَكَ الْحَمْدُ وَلَكَ الشُّكْرُ.

ترجمہ: اے اللہ! صبح کو جو نعمتیں میرے پاس ہیں، وہ تیری ہی دی ہوئی ہیں، تو اکیلا ہے۔ تیرا کوئی شریک نہیں ہے، تو ہی ہر طرح کی تعریف کا مستحق ہے، اور میں تیرا ہی شکر گزار ہوں۔


شام کی نعمتوں کا شکر بجا لانے کے لیے یہ دعا پڑھیں:


اللَّهُمَّ مَا أَمسٰی بِي مِنْ نِعْمَةٍ فَمِنْكَ وَحْدَكَ لَا شَرِيكَ لَكَ فَلَكَ الْحَمْدُ وَلَكَ الشُّكْرُ.

ترجمہ: اے اللہ! شام کو جو نعمتیں میرے پاس ہیں، وہ تیری ہی دی ہوئی ہیں، تو اکیلا ہے۔ تیرا کوئی شریک نہیں ہے، تو ہی ہر طرح کی تعریف کا مستحق ہے، اور میں تیرا ہی شکر گزار ہوں۔

(سنن لابی داؤد، باب ما یقول اذا اصبح، رقم الحدیث5073)

فضیلت: جس شخص نے صبح کے وقت ان کلمات کو پڑھ لیا، اس نے دن کی نعمتوں کا شکر ادا کردیا، اور جس شخص نے شام کے وقت ان کلمات کو پڑھ لیا، تو اس نے اس رات کی نعمتوں کا شکر ادا کردیا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
دلائل:

لما فی السنن لابی داؤد:

حَدَّثَنَا أَحْمَدُ بْنُ صَالِحٍ،‏‏‏‏ حَدَّثَنَا يَحْيَى بْنُ حَسَّانَ،‏‏‏‏ وَإِسْمَاعِيل،‏‏‏‏ قَالَا:‏‏‏‏ حَدَّثَنَا سُلَيْمَانُ بْنُ بِلَالٍ،‏‏‏‏ عَنْ رَبِيعَةَ بْنِ أَبِي عَبْدِ الرَّحْمَنِ،‏‏‏‏ عَنْ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ عنبسة،‏‏‏‏ عَنْ عَبْدِ اللَّهِ بْنِ غَنَّامٍ الْبَيَاضِيِّ أَنّ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَ:‏‏‏‏ مَنْ قَالَ حِينَ يُصْبِحُ اللَّهُمَّ مَا أَصْبَحَ بِي مِنْ نِعْمَةٍ فَمِنْكَ وَحْدَكَ لَا شَرِيكَ لَكَ فَلَكَ الْحَمْدُ وَلَكَ الشُّكْرُ فَقَدْ أَدَّى شُكْرَ يَوْمِهِ وَمَنْ قَالَ مِثْلَ ذَلِكَ حِينَ يُمْسِي فَقَدْ أَدَّى شُكْرَ لَيْلَتِهِ.

(سنن لابی داؤد، باب ما یقول اذا اصبح، رقم الحدیث5073، دار ابن حزم)

واللہ تعالٰی اعلم بالصواب
دارالافتاء الاخلاص، کراچی


ماخذ :دار الافتاء الاخلاص کراچی
فتوی نمبر :6191


فتوی پرنٹ