نکاح سے پہلے ہونے والی منکوحہ سے بات چیت کا حکم

سوال کا متن:

کیا نکاح سے پہلے لڑکی سے بات کرنا جائز ہےجب  کہ آپ کا رشتہ  ہوا ہو؟

جواب کا متن:

صورتِ  مسئولہ  میں نکاح سے قبل دونوں ایک دوسرے کے حق میں اجنبی ہیں، لہذا نکاح سے قبل ہونے والی منکوحہ سے بلا ضرورت بات چیت کرنا جائز نہیں۔

فتاوی شامی میں ہے:

"و لايكلم الأجنبية إلا ‌عجوزًا ‌عطست أو سلمت فيشمتها لايرد السلام عليها و إلا لا، انتهى."

(‌‌‌‌كتاب الحظر والإباحة، فصل في النظر والمس: 6/ 369، ط: سعید)

فقط واللہ اعلم

ماخذ :دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
فتوی نمبر :144307101603
تاریخ اجراء :21-02-2022