1. دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
  2. ممنوعات و مباحات
  3. تعویذات / عملیات
  4. تعویذ ، دم درود کی حقیقت و احکام

کاروبار کی ترقی کا وظیفہ

سوال

میں نے ایک کاروبار شروع کیا لیکن بند کرنا پڑا، اب دوبارہ شروع کرنا چاہتا ہوں لیکن کوئی نہ کوئی رکاوٹ آجاتی ہے، کئی حضرات سے ملا ،لیکن فرق نہیں آیا، اب خود ہی صبح شام منزل اور ایک وظیفہ شروع کردیا ہے، جو اکتالیس دن کا ہے اور پانچ دن باقی ہیں لیکن کوئی فرق نظر نہیں آرہا؟

جواب

رزق کے معاملہ کا تعلق اللہ تعالی کی تقسیم کے ساتھ ہے، وہ جسے چاہے جب چاہے اور جیسے چاہے رزق دیتا ہے، اس کے فیصلے کے سامنے کوئی منصوبہ نہیں چلتا، لہذا ایک مسلمان کو اس بارے میں اللہ تعالی کے فیصلوں پر ہمیشہ راضی رہنا چاہیے، آپ اول تو پانچوں نمازیں مسجد میں باجماعت ادائیگی کا اہتمام کریں، اس لیے نماز کے اہتمام کے ساتھ وسعتِ رزق کا وعدہ ہے، ہر نماز کے بعد تین بار یہ دعا پڑھیں :اللهم اکْفِنِیْ بِحَلاَلِکَ عَنْ حَرَامِکَ وَاَغْنِنِیْ بِفَضْلِکَ عَمَّنْ سِوَاکَ. منزل پڑھتے رہیں، مزید صبح شام معوذتین (سورہ فلق اور سورہ ناس) اور کثرت سے استغفار کا معمول بنائیں. اللہ تعالی پر یقینرکھیں کہ ان شاء اللہ آپ کے حالات درست ہوجائیں گے اور کاروبار بھی سنبھل جائے گا. فقط واللہ اعلم


ماخذ :دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
فتوی نمبر :143802200030
تاریخ اجراء :07-11-2016

فتوی پرنٹ