1. دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
  2. عبادات
  3. زکوٰۃ / صدقات
  4. نفلی صدقات

مقروض کا نفلی صدقہ کرنا

سوال

میرے اوپر تقریباً 300000 روپے قرض ہے۔میں اپنی تن خواہ  سے کتنے روپے صدقہ دیا کروں؟ میں ایک سرکاری نوکر ہوں!

جواب

شریعت نے نفلی صدقہ میں کسی مخصوص مقدار کو لازم قرار نہیں دیاہے۔لہذانفلی صدقہ حسبِ توفیق نکالنا چاہیے۔آپ کی استطاعت میں جتنی مقدار نکالنا ممکن ہو اتنی مقدار ہی صدقہ دے دیاکریں اگرچہ وہ کھجور کا ٹکڑا ہی کیوں نہ ہو (کماورد فی الحدیث)۔فقط واللہ اعلم


ماخذ :دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
فتوی نمبر :144004200399
تاریخ اجراء :02-01-2019

فتوی پرنٹ