1. دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
  2. عبادات
  3. زکوٰۃ / صدقات
  4. نفلی صدقات

فلاحی کاموں کا اجر امتِ مسلمہ کو پہنچانا

سوال

فلاحی کاموں میں جو رقم خرچ ہوتی ہے، اس رقم کا کچھ حصہ اُمتِ محمدیہﷺ کے نام کی نیت کر کے لگا سکتے ہیں؛ تاکہ وہ بھی اس صدقہ جاریہ کا حصہ بن سکیں۔راہ نمائی فرمائیں!

جواب

جی ہاں! ایسا کرنا درست اور باعثِ اجر و ثواب ہے، بلکہ کسی بھی نیک کام کا اجر تمام امتِ محمدیہ ﷺ کو پہنچانا درست ہے، خود نبی اکرم ﷺ نے بھی اپنی امت کی طرف سے قربانی فرمائی تھی۔ فقط واللہ اعلم


ماخذ :دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
فتوی نمبر :143908200775
تاریخ اجراء :10-05-2018

فتوی پرنٹ