1. دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
  2. حقوق و معاشرت
  3. لباس / وضع قطع
  4. پردے کے احکام

ایک عورت کا دوسری عورت سے پردہ میں زیر ناف بالوں کا ویکس کروانے کا حکم

سوال

کیا عورت کا کسی دوسری عورت سے پردہ میں زیرناف بالوں کا ویکس کرانا کیسا ہے؟

جواب

ستر چھپانا فرض ہے اور کسی کے سامنے بلا ضرورت ستر کھولنا جائز نہیں ہے، اور ویکس کرانا ایسی ضرورت نہیں کہ اس کے لیے ستر کھولنا جائز ہو جائے؛ لہذا زیرِ ناف بالوں کے ویکس کرانے کی غرض سےکسی خاتون کا دوسری خاتون کے سامنے ستر کھولنا جائز نہیں ہے، چاہے پردہ میں ہی کیوں نہ ہو۔ اور اگر ویکس کرانے والی عورت کے ستر پر کپڑا ہو اور ویکس کرنے والی عورت بھی اس کا ستر نہ دیکھے تو بھی شرعاً اس کی اجازت نہیں ہوگی؛ اس لیے کہ جیسے بلاضرورتِ شرعیہ دوسرے کا ستر  دیکھنا جائز نہیں ہے، اسی طرح بلاضرورت دوسرے کے ستر کو چھونا بھی جائز نہیں ہے۔ 

اگر خود اکھاڑنے میں مشکل ہو تو کریم یا پاؤڈر وغیرہ استعمال کیا جاسکتا ہے۔فقط واللہ اعلم


ماخذ :دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
فتوی نمبر :144008200625
تاریخ اجراء :01-05-2019

فتوی پرنٹ