1. دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
  2. عبادات
  3. حج / عمرہ
  4. متفرقات حج و عمرہ

دوگانہ طواف بھول جائے تو کیا حکم ہے؟

سوال

عمرہ کرتے ہوئے طواف کے دو نوافل بھول گیا،  کیا دم دینا ہوگا ؟

جواب

 ہر طواف کے سات چکروں کے بعد دو رکعت نماز پڑھنا واجب ہے، اور حرم شریف میں پڑھنا سنت ہے، اور مقامِ ابراہیم اور بیت اللہ کو سامنے لےکر پڑھنا افضل ہے۔ اگر وہاں جگہ نہ ملے تو پوری مسجد الحرام میں کہیں بھی پڑھ سکتے ہیں،  اگر کسی نے یہ دو رکعت  مسجد الحرام میں نہیں پڑھی  تو اس کو جہاں کہیں بھی ادا کرے، ادا کرنا واجب ہے، جب تک ادا نہیں کرے گا ذمہ سے ساقط نہیں  ہوگی، اگر  دوگانہ طواف پڑھنا بھول گیا اور اپنے وطن واپس پہنچ گیا  تو اپنے وطن میں ہی یہ دو رکعت پڑھ لے، اس پر تاخیر کی وجہ سے دم لازم نہیں آئے گا اور اپنے وطن میں پڑھنے سے بھی واجب ادا ہوجائے گا۔ فقط واللہ اعلم


ماخذ :دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
فتوی نمبر :144007200510
تاریخ اجراء :01-04-2019

فتوی پرنٹ