1. دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
  2. حقوق و معاشرت
  3. نکاح / طلاق
  4. طلاق - وقوع اور عدم وقوع

میں تجھے طلاق دے دی

سوال

"میں تجھے طلاق دے دی"  کہنے کا کیا حکم ہے؟

جواب

مذکورہ الفاظ "میں تجھے طلاق دے دی" سے ایک طلاقِ رجعی واقع ہوجاتی ہے اور شوہر عدت کے اندر اپنی بیوی سے رجوع کا حق رکھتا ہے۔ اور عدت گزرنے کے بعد باہمی رضامندی سے نئے مہر کے ساتھ جدید نکاح کی بھی اجازت ہے، تاہم دوبارہ ساتھ رہنے کی صورت میں شوہر کو آئندہ دو طلاقوں کا حق ہوگا۔

"(ويقع بها) أي بهذه الألفاظ وما بمعناها من الصريح، ...(واحدة رجعية..." ( فتاوی شامی، ۳/۲۴۸، سعید) فقط واللہ اعلم


ماخذ :دار الافتاء جامعۃ العلوم الاسلامیۃ بنوری ٹاؤن
فتوی نمبر :144010200027
تاریخ اجراء :12-06-2019

فتوی پرنٹ