1. دار الافتاء دار العلوم دیوبند
  2. معاملات
  3. دیگر معاملات

دکان کے سامنے گاڑی کھڑی کرنا

سوال

دکان کے سامنے گاڑی کھڑی کرنا

جواب

Fatwa: 980-742/H=8/1443

 عام سڑک کسی کی ذاتی ملکیت نہیں ہوتی بلکہ اس سے حقوق عامہ متعلق ہوتے ہیں اور اس پر اپنا ذاتی سامان رکھنے سے عموماً لوگوں کو پریشانی ہوتی ہے اور راستے کے حقوق کی پامالی ہوتی ہے جب کہ اسلام نے راستوں کے حقوق و واجبات ادا کرنے کا بھی حکم دیاہے؛لہذا اگر وہ جگہ جس پر گاڑی کھڑی کی جاتی ہےان صاحب کی ذاتی نہیں ہے بلکہ سرکاری ہے تو ان صاحب کو وہاں گاڑی کھڑی نہیں کرنی چاہیے اور اس بات کی کوشش کرنی چاہیے کہ اپنے عمل سےکسی کو تکلیف نہ پہنچے ،ایذاء مسلم حرام ہے ۔

واللہ تعالیٰ اعلم

دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم دیوبند
فتوی نمبر :609890
تاریخ اجراء :10-Mar-2022

فتوی پرنٹ