1. دار الافتاء دار العلوم دیوبند
  2. متفرقات
  3. دیگر

میں نے گزشتہ سال ایک خواب دیکھا تھا جب میں تین ماہ کی حاملہ تھی جو کہ حسب ذیل ہے۔ میں نے اپنے آپ کو ایک دور افتادہ جنگل کی طرح کی جگہ میں دیکھا اور اپنے شوہر سے اللہ کے بارے میں بات کررہی تھی اور ایک درخت کی جانب اشارہ کرر

سوال

میں
نے گزشتہ سال ایک خواب دیکھا تھا جب میں تین ماہ کی حاملہ تھی جو کہ حسب ذیل ہے۔
میں نے اپنے آپ کو ایک دور افتادہ جنگل کی طرح کی جگہ میں دیکھا اور اپنے شوہر سے
اللہ کے بارے میں بات کررہی تھی اور ایک درخت کی جانب اشارہ کررہی تھی اور لفظ
اللہ کو دہرارہی تھی، اور اچانک میں نے اس درخت سے ایک روشنی دیکھی جو کہ سورج کی
شکل کی تھی۔ہم دونوں تشہد کی حالت میں بیٹھ گئے اور روشنی ہمارے سامنے آگئی ایسا
لگتا تھا گویا کہ سورج ہمارے سامنے آگیا ہو۔اس روشنی کو دیکھ کر میرے شوہر آمین
کہہ رہے ہیں اور میں سبحان اللہ کہہ رہی ہوں اور وہ روشنی اور زیادہ روشن بن گئی
اور زمین میں شگاف پیدا ہونا شروع ہوگیا۔ اچانک میں بیدار ہوگئی اور میں نے دیکھا
کہ میں کانپ رہی تھی اور مجھے لگا کہ یہ فجر کا وقت تھا۔


(۲) اور دوبارہ اپنے حمل کے
آٹھویں مہینہ میں میں نے ایک خوا ب دیکھا جس میں میں نے آسمان میں ایک روشنی دیکھی
بہت سارے شور کے ساتھ جو کہ راکٹ کی شکل میں گزر رہی تھی اور میں اپنے مکان کی
کھڑکی سے دیکھ رہی ہوں اور میں خوف زدہ نہیں ہوں۔ الحمد للہ اللہ نے ہمیں ایک لڑکا
عطا فرمایا۔ برائے کرم ان خوابوں کی تعبیر عنایت فرماویں۔


جواب

بسم الله الرحمن الرحيم
فتوی:
1625=1297/ھ
 
دونوں
خوابوں کی تعبیر یہ ہے کہ نوزائیدہ لڑکا ان شاء اللہ نیک صالح اور حافظ قرآن ہوگا۔
واللہ تعالیٰ اعلم
دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم دیوبند
فتوی نمبر :14728
تاریخ اجراء :میں نے گزشتہ سال 

PDF ڈاؤن لوڈ