1. دار الافتاء دار العلوم دیوبند
  2. عبادات
  3. جمعہ و عیدین

ہمارے گاؤں میں جمعہ اور ظہر دونوں نمازیں پڑھی جاتی ہیں كیا یہ صحیح ہے؟

سوال

میرا سوال یہ ہے کہ میرے گاؤں کی مسجد میں امام صاحب جمعہ کے دن جمعہ کی اور ظہر کی نماز پڑھاتے ہیں تو کیا یہ صحیح ہے یا غلط ہے؟

جواب

بسم الله الرحمن الرحيم
Fatwa : 561-472/D=06/1440
(۱) اگر وہ جگہ شہر قصبہ یا بڑا گاوٴں ہے جہاں کہ جمعہ فرض ہوتا ہے تو ایسی جگہ بس جمعہ کی نماز ادا کی جائے ظہر ادا کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ اور اگر جمعہ کے شرائط نہیں پائے جاتے تو بس ظہر ہی بالجماعت ادا کی جائے۔
(۲) صورت مسئولہ میں مذکور فی السوال گاوٴں کیسا ہے؟ وہاں جواز جمعہ کے جملہ شرائط پائے جاتے ہیں یا نہیں؟ یا اکثر نہیں پائے جاتے یا بعض پائے جاتے ہیں؟ جو بھی صورت حال ہو بالوضاحت لکھیں۔
(۳) امام صاحب کس وجہ سے دونوں نمازیں پڑھاتے ہیں؟ کیا وہ خود مفتی ہیں یا کسی مفتی سے حکم معلوم کرکے عمل کرتے ہیں۔ ان سے لکھواکر منسلک کریں۔
واللہ تعالیٰ اعلم
دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم دیوبند
فتوی نمبر :168864
تاریخ اجراء :Feb 28, 2019

PDF ڈاؤن لوڈ