1. دار الافتاء دار العلوم دیوبند
  2. عبادات
  3. اوقاف ، مساجد و مدارس

مسجد کے متولی کو اگر مسجد کے لیے پیسے ملیں اور یہ متولی ان پیسوں کو اپنے استعمال میں لے آئے اور بعد میں ان کو مسجد کے کسی کام میں خرچ کرے، تو ایسا کرنا جائز ہے؟ 

سوال

مسجد کے متولی کو اگر مسجد کے لیے پیسے ملیں اور یہ متولی ان پیسوں کو اپنے استعمال میں لے آئے اور بعد میں ان کو مسجد کے کسی کام میں خرچ کرے، تو ایسا کرنا جائز ہے؟ 

جواب


بسم الله الرحمن الرحيم فتوی(ل): 1856=1334-1/1432
مسجد کا متولی چندہ دہندگان کا امین ہوتا ہے، اس کے لیے مسجد کے روپئے کو اپنے استعمال میں لانا جائز نہیں۔
واللہ تعالیٰ اعلم
دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم دیوبند
فتوی نمبر :27837
تاریخ اجراء :Dec 15, 2010

PDF ڈاؤن لوڈ