1. دار الافتاء دار العلوم دیوبند
  2. معاملات
  3. وراثت ووصیت

اگر صرف منگنی ہوئی ہو تو كیا لڑكی وارث ہوگی؟

سوال

حضرت، ایک سوال پوچھنا تھا میراث کے متعلق ایک بندہ فوت ہوا ہے اس کا نکاح نہیں ہوا تھا۔اور معاشرے کے رسم و رواج کے مطابق صرف منگنی ہواتھا تو پوچھنا یہ تھا کہ کیا اس لڑکی کو اس(مرے ہوئے شوہر) کی میراث میں سے حصہ ملے گا؟ بعد میں اپنے دیور سے شادی کرلی۔

جواب

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 545-499/M=06/1441


جب تک نکاح نہ ہو جائے، لڑکا اور لڑکی آپس میں میاں بیوی نہیں بنتے۔ صورت مسئولہ میں جب کہ صرف منگنی ہوئی تھی، نکاح نہیں ہوا تھا اور لڑکا فوت ہوگیا تو لڑکی اس فوت شدہ لڑکے کی وارث نہیں ہوئی، اس کو میت کے ترکہ سے کوئی حصہ نہیں ملے گا۔

واللہ تعالیٰ اعلم

دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم دیوبند
فتوی نمبر :176496
تاریخ اجراء :Feb 9, 2020

PDF ڈاؤن لوڈ