1. دار الافتاء دار العلوم دیوبند
  2. معاملات
  3. دیگر معاملات

مزارعت كی كتنی شكلیں درست ہیں؟

سوال

زمین اور ٹیوب ویل ایک کا ہو اور عمل دوسرے کا ہو اور باقی تمام خرچے (بیج،کھاد،ٹریکٹر،وغیرہ)مشترکہ ہوں اور پیداوار میں دونوں برابر شریک ہوں کیا یہ صورت جائز ہے اگر نہیں تو جواز کی کیا صورت ہو سکتی ہے ؟

جواب

Fatwa : 318-276/B=04/1442

 صاحب درمختار نے مزارعت کے صحیح ہونے کی حضرات صاحبین سے آٹھ شرطیں لکھی ہیں۔ لیکن اخیر میں یہ بھی لکھا ہے کہ حسب ذیل تین صورتوں میں سے کوئی ایک شکل بھی اختیار کرلے تو صحیح ہے۔

(۱) زمین اور بیچ زید کا اور بقر و عمل دوسرے کا۔ (۲) زمین ایک کا اور باقی اشیاء دوسرے کی۔ (۳) عمل ایک کا اور باقی اشیاء دوسرے کی۔ بحوالہ فتاوی دارالعلوم ، ص: ۶۹۶۔

واللہ تعالیٰ اعلم

دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم دیوبند
فتوی نمبر :601039
تاریخ اجراء :13-Dec-2020

فتوی پرنٹ