1. دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
  2. متفرقات

سننے میں آرہا ہے کہ پولیو کی دوا پلانا جائز نہیں ہے کیونکہ اس میں ملاوٹ ہے۔

سوال

سننے میں آرہا ہے کہ پولیو کی دوا پلانا جائز نہیں ہے کیونکہ اس میں ملاوٹ ہے۔

جواب

Ref. No. 40/916

الجواب وباللہ التوفیق 

بسم اللہ الرحمن الرحیم:۔ پولیو کی دوا میں جب تک تحقیق سے کسی غلط چیز کی ملاوٹ کا ثبوت  نہ ہوجائے اس کو ناجائز نہیں کہا جائے گا۔ حکومت کا یہ اقدام ملک سے پولیو کے خاتمے کے لئے ہے اور اس میں کافی حد تک کامیاب بھی ہے، اس لئے بلاوجہ اس میں شبہ کرنا مناسب نہیں ۔

واللہ اعلم بالصواب

 

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند

 


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
فتوی نمبر :1503
تاریخ اجراء :Dec 3, 2018,

فتوی پرنٹ