1. دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
  2. نماز / جمعہ و عیدین

ہماری مسجد میں کل ایک شخص نے اعلانیہ طور پر کہا- نماز مغرب میں اگر کویی شخص تیسری رکعت میں جڑے تو فوت شدہ رکعت کو سلام پھیرنے کے بعد اس طرح پڑھا جاے کہ دونوں رکعت میں ایک ہی تشہد ہو یعنی دونوں رکعت کے درمیان نہ بیٹھے اور ی

سوال

ہماری مسجد میں کل ایک شخص نے اعلانیہ طور پر کہا-
نماز مغرب میں اگر کویی شخص تیسری رکعت میں جڑے تو فوت شدہ رکعت کو سلام پھیرنے کے بعد اس طرح پڑھا جاے کہ دونوں رکعت میں ایک ہی تشہد ہو یعنی دونوں رکعت کے درمیان نہ بیٹھے اور یہ حدیث سے صابت ہے۔
کیا ان حضرت کی بات صحیح ہے؟

جواب

Ref. No. 39 / 0000

الجواب وباللہ التوفیق                                                                                                                                                        

بسم اللہ الرحمن الرحیم:۔  چھوٹی ہوئی ایک رکعت پڑھنے کے بعد بیٹھنا چاہئے البتہ دونوں رکعتیں پڑھنے کے بعد بیٹھا تو بھی استحسانا نماز درست ہوجائے گی۔    اس کے خلاف کوئی حدیث ملی ہو تو مع حوالہ  ارسال کریں۔    

واللہ اعلم بالصواب

 

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
فتوی نمبر :1097
تاریخ اجراء :Feb 5, 2018,

PDF ڈاؤن لوڈ