1. دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
  2. طلاق و تفریق

سوال: ایک شخص نے اپنی بیوی کو دھمکاتے ہوے کہا کہ : اگر آج کی رات تو نے مجھے ہمبستری سے روکا تو آج کی رات تو مجھ پر حرام ہے،اب عورت نے ہمبستری سے روکا تو کیا طلاق واقع ہو جائے گی؟برائے کرم (طلاق کا مسئلہ ہے اسلیے) جلد از ج

سوال

Ref. No. 38 / 935

سوال: ایک شخص نے اپنی بیوی کو دھمکاتے ہوے کہا کہ : اگر آج کی رات تو نے مجھے ہمبستری سے روکا تو آج کی رات تو مجھ پر حرام ہے،اب عورت نے ہمبستری سے روکا تو  
کیا طلاق واقع ہو جائے گی؟
برائے کرم (طلاق کا مسئلہ ہے اسلیے) جلد از جلد جواب عنایت فرما کر شکریہ کا موقعہ عنایت فرمائیں

جواب

Ref. No. 38/ 926

الجواب وباللہ التوفیق                                                                                                                                                        

بسم اللہ الرحمن الرحیم: طلاق بائن واقع ہوگئی ۔ واللہ اعلم بالصواب

 

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
فتوی نمبر :790
تاریخ اجراء :Dec 13, 2016,

فتوی پرنٹ