1. دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
  2. طہارت / وضو و غسل

میرے ایک ساتھی نے سوال کیاہے جوکہ دوم عربی تک پڑھاہےاس کے بعد پڑھائی چھوڑ دی میں اسکوکیسے سمجھاؤں اس مسئلے کوواضح طورپر بتائیں کہ جب امام شافعی رحمہ اللہ کے نزديك منی پاك ہے تو غسل واجب كيوں ہوتا ہے احتلام سے؟ مدلل جوا

سوال

Ref. No. 821

میرے ایک ساتھی نے سوال کیاہے جوکہ دوم عربی تک پڑھاہےاس کے بعد پڑھائی چھوڑ دی میں اسکوکیسے سمجھاؤں اس مسئلے کوواضح طورپر بتائیں  کہ جب امام شافعی رحمہ اللہ  کے نزديك منی پاك ہے تو غسل واجب كيوں ہوتا ہے  احتلام سے؟  مدلل جواب  دیں

جواب

Ref. No. 815

الجواب وباللہ التوفیق                                                                                         

بسم اللہ الرحمن الرحیم-:  حضرت امام شافعی رحمہ اللہ نے اپنی کتاب ٰالامٰ  میں اس کی وجہ یہ بیان کی ہے کہ اس میں غسل کا وجوب امر تعبدی ہے، اور امر تعبدی کا مطلب یہ ہے کہ اللہ تعالی کی بندگی کے طور پر اس کا حکم بجالانا،  اور بلا چوں چرا اس کو قبول کرنا ۔ لہذا امام شافعی علیہ الرحمہ کے نزدیک یہ ایک حکم خداوندی ہے جس  کے لیے کسی مزید دلیل کی ضرورت نہیں ہے۔ )الام، باب المنی(۔ واللہ اعلم  بالصواب

 

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
فتوی نمبر :502
تاریخ اجراء :Nov 10, 2015,

فتوی پرنٹ