1. دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
  2. حدیث و سنت

السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ حضرت میرا ایک سوال ہے کہ میں جبہ پہنتا ہوں کچھ لوگ اس بارے میں کہتے ہیں کہ یہ نائٹی ہے مذاق مذاق میں لوگ اسے نائٹی کہتے ہیں حضرت وضاحت فرما دے کہ اس طرح سے کہنے والوں کے لیے کیا گناہ ہو گا

سوال

السلام علیکم ورحمتہ اللہ وبرکاتہ حضرت میرا ایک سوال ہے کہ میں جبہ پہنتا ہوں کچھ لوگ اس بارے میں کہتے ہیں کہ یہ نائٹی ہے مذاق مذاق میں لوگ اسے نائٹی کہتے ہیں حضرت وضاحت فرما دے کہ اس طرح سے کہنے والوں کے لیے کیا گناہ ہو گا

جواب

Ref. No. 1617/43-1203

بسم اللہ الرحمن الرحیم:۔مذاق کو مذاق کی حد تک رہنے دیں۔ اایسا کہنے والوں پر بھی کوئی گناہ نہیں۔سفید رنگ کا صاف ستھرا جبہ پہنیں تو شاید ایسی بات لوگ نہ کہیں۔ ہوسکتاہے آپ کا جبہ رنگین ہو۔ اور اگر پھر بھی لوگ کہیں تو کہنے دیں، آپ کو جبہ پسند ہے ، آپ اپنی پسند پر عمل کریں ۔  البتہ اگر وہ اس سے آپ کا مذاق اڑاتے ہیں، اور آپ کی توہین کرتے ہیں تو اس تذلیل کا ان کو گناہ ہوگا۔

یٰۤاَیُّهَا الَّذِیْنَ اٰمَنُوْا لَا یَسْخَرْ قَوْمٌ مِّنْ قَوْمٍ عَسٰۤى اَنْ یَّكُوْنُوْا خَیْرًا مِّنْهُمْ وَ لَا نِسَآءٌ مِّنْ نِّسَآءٍ عَسٰۤى اَنْ یَّكُنَّ خَیْرًا مِّنْهُنَّۚ-وَ لَا تَلْمِزُوْۤا اَنْفُسَكُمْ وَ لَا تَنَابَزُوْا بِالْاَلْقَابِؕ-بِئْسَ الِاسْمُ الْفُسُوْقُ بَعْدَ الْاِیْمَانِۚ-وَ مَنْ لَّمْ یَتُبْ فَاُولٰٓىٕكَ هُمُ الظّٰلِمُوْنَ (سورۃ الحجرات 11)   

واللہ اعلم بالصواب

دارالافتاء

دارالعلوم وقف دیوبند


ماخذ :دار الافتاء دار العلوم (وقف) دیوبند
فتوی نمبر :3947
تاریخ اجراء :Sep 20, 2021

فتوی پرنٹ